کیا مرد ڈاکٹر ،مریض عورت کے لئے کیلئے محرم ہے؟

عام طور سے یہ بات کہی جاتی ہے کہ مریض عورت ،مردڈاکٹر کو دیکھا سکتی ہے کیا مرد ڈاکٹر ،مریض عورت کے لئے کیلئے محرم ہے؟

جواب

مردڈاکٹر ،تمام نامحرم مردوں کی طرح ہےاور جب تک عورت مجبور نہ ہو کسی مرد ڈاکٹر کو نہیں دکھا سکتی ہےاور ضرورت پڑنے پر حجاب اور اسلامی اصولوں کا خاص خیال رکھنا چاہئے،اور ڈاکٹر بھی جہاں تک ممکن ہو دستانہ کا استعمال کرے اور غیر ضروری نگاہ اور چھونے سے پر ہیز کرے،ڈاکٹر کا محرم ہونا، یہ کوئی شرعی اصطلاح نہیں ہے ،ڈاکٹر کے محرم ہونے کا مطلب یہ ہے کہ وہ مریض کا علاج صحیح طریقہ سے کرے اور اس کے مرض کا راز دار رہے۔

حضرت آیت اللہ سیستانی فرماتے ہیں :

اگر ہم جنس ڈاکٹر موجود نہ ہو یا مرد ڈاکٹر زیادہ ماہر اور تعلیم یافتہ ہو تو ایسی صورت میں علاج کے لئے ،عضو کا معاینہ کرنا اور اسےچھونا جائز ہے لیکن صرف ضرورت کی مقدار پر اکتفا کریں ۔

اگر آپ کو ہمارا جواب پسند آیا تو براہ کرم لائک کیجیئے
9
شیئر کیجئے